وٹامن ڈی اور عجیب انسان

(Abu Yahya ابویحییٰ)

 

وٹامن ڈی ہڈیوں کو مضبوط بنانے میں بنیادی کردار ادا کرتا ہے۔ اس کے حصول کا سب سے بڑا ذریعہ سورج ہے۔ مگراس کے ساتھ یہ بھی ایک حقیقت ہے کہ وٹامن ڈی کی زیادتی خود صحت کے لیے نقصان دہ ہے۔ اس کے نتیجے میں بھوک کی کمی سے لے کر گردوں کی بیماری تک جیسے مسائل کا سامنا ہو سکتا ہے۔

ایسے میں سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ جو لوگ مستقل سورج میں رہتے ہیں، ان میں وٹامن ڈی کی زیادتی کیوں نہیں ہوتی؟ اس کا جواب یہ ہے کہ انسانی جلد ضرورت پوری ہونے پر وٹامن ڈی بنانا بند کر دیتی ہے۔ یہ بالکل ایسے ہی ہے جیسے یو پی ایس سے منسلک بیٹری خالی ہونے پر بھرتی رہتی ہے اور جیسے ہی بیٹری بھر جاتی ہے سسٹم بجلی بھرنا بند کر دیتا ہے۔ انسانی جلد یہی کام کرتی ہے۔ صرف اس فرق کے ساتھ کہ بیٹری ہر تھوڑ ے عرصے بعد خراب ہوتی رہتی ہے اور انسانی جلد بغیر خراب ہوئے ساری زندگی یہ کام کرتی رہتی ہے۔

انسانی جلد میں ہونے والا یہ عمل ان بے گنتی مظاہر میں سے ایک ہے جو اس کرہ ارض پر زندگی اور خاص کر انسانی زندگی کوممکن بناتے ہیں۔ آج کے انسان نے ہر دور سے بڑھ کر ان عجیب و غریب مظاہر کو دریافت کر لیا ہے جو زبان حال سے پکار کر یہ بتا رہے ہیں کہ یہ کارخانہ ایک حکیم و علیم رب کی قدرت اور ربوبیت کا شاہکار ہے۔

مگر عجیب المیہ ہے کہ آج کا انسان ہر دور سے بڑھ کر اپنے اس خالق اور مالک کو بھولا ہوا ہے۔ یہ انسان خدا کو ماننے کے لیے تیارنہیں۔ یہ انسان اس کی شکرگزاری کرنے کے لیے تیار نہیں۔ یہ انسان اس کے حکم کے سامنے اپنے تعصبات اور خواہشات کو چھوڑنے کے لیے تیار نہیں۔ کیسا عجیب ہے یہ انسان اور کیسی عجیب ہے اس کی یہ بے حسی۔۔۔

http://www.inzaar.org

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s