درخت اور انسان

قرآن پاک کے مطالعے سے معلوم ہوتا ہے کہ ایک اعلیٰ اخلاقی کردار ہی دین کا مطلوب و مقصود ہے ۔کوئی انسان اگر اس کردار کے مطابق زندگی گزارنا چاہتا ہے تو اسے درخت کواپناآئیڈیل بناناچاہیے ۔درخت کے دو پہلو اس معاملے میں انسان کے لیے بہترین رہنما ہیں ۔

ایک درخت کی زندگی کا سب سے نمایاں پہلو ہر قسم کے تعصب سے خالی ہونا ہوتا ہے ۔ درخت ایک آفاقی پروڈکٹ ہے جس کی نشو ونما میں پوری کائنات حصہ لیتی ہے ۔ درخت اپنے وجود کو بڑ ھاتا ہے اوراس عمل میں وہ کسی سے تعصب نہیں برتتا۔وہ ایک دوسرے درخت کے بیج سے جنم لیتا ہے ، مگر اس کے بعدوہ بلاتعصب سورج سے روشنی قبول کرتا ہے ۔ وہ بغیرکسی تعصب کے آسمان اوربادلوں سے پانی وصول کرتا ہے ۔ وہ بغیرکسی تعصب کے فضا سے ہواکوجذب کرتا ہے وہ بغیرکسی تعصب کے زمین سے اس کی زرخیزی اورمٹی اخذکرتا ہے ۔ان سب چیزوں کی مددسے وہ اپنے وجودکوبڑ ھاتا ہے اورایک چھوٹے سے بیج سے ، ایک طاقتوراور سایہ داردرخت میں تبدیل ہوجاتا ہے ۔اگر وہ تعصب کا مظاہرہ کرتا تو کبھی کوئی بیج درخت نہ بن پاتا۔

درخت کی زندگی میں ہمارے لیے ایک دوسرانمونہ اس اعتبارسے ہے کہ جب اس کے ساتھ برائی کامعاملہ ہوتا ہے ، تب بھی وہ بھلائی کامعاملہ ہی کرتا ہے ۔اس کی زندگی کے آغازہی پر اسے زمین میں دبادیا جاتا ہے ، لیکن وہ شکایت نہیں کرتا۔بلکہ شکایت کیے بغیروہ کوشش اور جدو جہد کرتا ہے اور زمین سے باہرنکل آتا ہے ۔ جب وہ باہرنکلتا ہے تویہ فضا اسے کاربن ڈائی آکسائیڈ دیتی ہے ، لیکن وہ انسانوں کوپلٹ کرآکسیجن دیتا ہے ۔ اس کے وجودکو زمین بدشکل جڑ اور بے روپ تنے کی شکل میں جنم دیتی ہے ۔ لیکن وہ پلٹ کر لوگوں کو سبزے ، پھول اور پھل کی بہاریں دیتا ہے ۔لوگ اسے پتھرمارتے ہیں ، لیکن وہ اپنے پھل ان پرنچھاورکر دیتا ہے ۔ اسے دھوپ ملتی ہے ، لیکن وہ انسانوں کوسایہ دیتا ہے ۔سب سے بڑ ھ کریہ کہ ایک وقت آتا ہے کہ اسے کاٹ دیا جاتا ہے ۔مگر پھر بھی یہ لوگوں کے فائدے کے لیے ان کے گھرکافرنیچر، ان کے بیٹھنے کاصوفہ اور ان کے لیٹنے کی مسہری بن جاتا ہے ۔ حتیٰ کہ جب اسے آگ میں جلا دیا جاتا ہے تب بھی وہ لوگوں کوروشنی اورحرارت دیتا ہے ۔

اس میں کوئی شک نہیں کہ درخت کی طرح جو انسان ہر طرح کے تعصب سے پاک ہو اور یکطرفہ طور پر مخلوق خدا کا خیر خواہ ہو، کل قیامت کے دن اللہ تعالیٰ اسے اس کے صبرکابہترین بدلہ دینگے اوراسے جنت کے ابدی باغوں میں ہمیشہ کے لیے بسادیا جائے گا۔

==============

 
 
Please follow below given link to subscribe to Inzaar’s YouTube channel for videos
Advertisements